اسلامک

جب اللہ تعالی نے حضرت موسی علیہ السلام کو چالیس راتوں کے لئے اپنے پاس بلایا

جب اللہ تعالی نے حضرت موسی علیہ السلام کو چالیس راتوں کے لئے اپنے پاس بلایا اور پھر تم لوگوں نے حضرت موسی علیہ السلام کے پیچھے بچھڑے کو معبود بنا ڈالا اور یہ تم نے بہت بڑی زیادتی کر ڈالی جب اللہ تعالی نے فرعون سے نجات دلوانے کے بعد چالیس روز کے لیے کوہِ طور پر طلب فرمایا کیونکہ ان کو بتایا جائے قرآنی اور شریعت کے احکام ان تک پہنچائے جائیں گائے اور بچھڑے کے معبود ہونے کی مرض بنی اسرائیل کے تمام قریبی اقوام میں عام پھیلا ہوا تھا مصر اور قرعان میں اس کا عام رواج تھا۔ حضرت یوسف علیہ السلام کے بعد بنی اسرائیل کے لوگوں نے نے کتنی یوکے اقوام میں میں معبود کا یہ سلسلہ الہام تھا تو یہ وہاں سے انہوں نے لیا دیا تاکہ تم شکر ادا کرنے والوں میں بن جاؤں اللہ تعالی فرماتے ہیں کہ جب تم تم یہ یہ مرض میں مبتلا ہوگئے تھے اور بچھڑے کو معبود بنا لیا تھا تب ہم نے علی علیہ السلام کو کو کتاب فرقان عطا کی تاکہ تم اس کے ذریعہ سے سیدھا راستہ پاسکو کوسرکار وہ چیز ھے جس کے ذریعہ سے حق اور باطل کا فرق نمایاں ہوتا ہے اردو میں اس کا جو مفہوم بنتا ہے وہ اس کا نام کسوٹی ہے فرقان سے مراد دین کا وہ ایم اور فہم ہے جس میں آدمی حق اور باطل میں تمیز کرتا ہے

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button