174 views 0 secs 0 comments

والدہ کی خدمت میں برکت

In اسلام
January 11, 2021

حضرت با یزید بسطامی رحمہ اللہ فرمایا کرتے تھے کہ مجھے جتنے بھی مراتب حاصل ہوئے سب والدہ کی اطاعت سے حاصل ہوئے ایک مرتبہ میری والدہ نے رات کو پانی مانگا لیکن اتفاق سے اس وقت گھر میں قطعاً پانی نہیں تھا چنانچہ میں گھڑا لے کر نہر سے پانی لایا مگر میری آمدو رفت کی تاخیر کی وجہ سے والدہ کو پھر نیند آ گئی اور میں رات بھر پانی لے کر کھڑا رہا حتیٰ کہ شدید سردی کی وجہ سے وہ پانی آبخورے میں برف بن گیا اور جب والدہ کی بیداری کے بعد میں نے انہیں پانی پیش کیا تو انھوں نے فرمایا کہ تم نے پانی رکھ دیا ہوتا اتنی دیر کھڑے رہنے کی کیا ضرورت تھی میں نے عرض کیا کہ میں اس خوف سے کھڑا رہا کہ مبادہ آپ کہیں بیدار ہو کر پانی نہ پیئیں اور آپ کو تکلیف پہنچیں یہ سن کر انھوں نے مجھے دعا دی اسی طرح ایک رات والدہ نے فرمایا کہ دروازے کا ایک پٹ کھول دو لیکن میں رات بھر اس پریشانی میں کھڑا رہا کہ نہ معلوم داہنا پٹ کھولوں یا بایاں کیونکہ اگر ان کی مرضی کے خلاف غلط پٹ کھل گیا تو حکم عدولی میں شمار ہوگا چنانچہ انھیں خدمتوں کی برکت سے یہ مراتب مجھ کو حاصل ہوئے