تعلیم

طلاق

اللہ تعالی نے قرآن مجید فرقان حمید میں میاں بیوی کے درمیان طلاق کے بعد باہمی اصلاح اور معروف طریقے سے عدت کے اندر عدد کے تکمیل اور عادت کے تکمیل کے عرصے بعد باہمی رضامندی سے رجوع کا دروازہ کھلا رکھا ہے لیکن باہمی اصلاح کے بغیر طلاق کے بعد عدت کے اندر بھی شوہر کو رجوع کی جازت نہیں دی ہے اور ایسے صورت میں جب میاں بیوی طلاق کے بعد باہمی رضامندی سے اصلاح پر آمادہ نہ ہو تو چونکہ شوہر کی غیرت کا تقاضا ہوتا ہے کہ طلاق کے بعد بھی عورت اپنی مرضی سے کہیں شادی نہ کر لے اس لیے اللہ تعالی نے یہ واضح کر دیا ہے کہ طلاق کے بعد اس کے لئے حلال نہیں یہاں تک کہ وہ عورت کسی اور سے نکاح کر لے جس طرح برطانیہ کے شہزادہ چارلس نے لیڈی ڈیانا کو طلاق دی اور پھر کسی اور سے اس کا تعلق برداشت نہ ہو سکا اور فرانس کے شہر پیرس میں قتل کر دی گئی جس کا کیس عدالت میں چل رہا ہے.

IbrahimRaza

I am a all rounder everyone work

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button
error: Content is protected !!