HEALTH & MEDICAL

وزن کم کرنے کے ساتھ ساتھ ، املی بہت سی خصوصیات کا خزانہ ہے

پاکستان میں کھانے کی تمام اقسام میں املی کا استعمال بہت عام ہے۔ املی یہاں مصالحے کے طور پر استعمال ہوتی ہے۔ املی کا رس وزن میں کمی کے ساتھ ساتھ ہمارے جسم میں بلڈ پریشر اور کولیسٹرول کو کافی حد تک قابو میں رکھتا ہے۔
کھجلی اور میٹھے ذائقہ کی وجہ سے املی نہ صرف پاکستان میں بلکہ دوسرے ممالک میں بھی بہت مشہور ہے۔ املی کا نام سن کر کچھ لوگوں کے منہ میں پانی آجاتا ہے۔ عام طور پر انڈیا میں گلیگپا پانی یا چٹنی جیسی کسی بھی چیز کو کھٹا کرنے کے لئے املی کا استعمال کیا جاتا ہے۔

املی کے فائدے:
وزن کم
وزن کو کم کرنے کے لئے املی کا رس بہترین علاج ہے۔ املی کے جوس میں بہت زیادہ ہائڈروکسیل ایسڈ ہوتا ہے جو جسم کو چربی جلانے والے خامر کو بنانے میں مدد کرتا ہے ، جو آپ کو تیزی سے وزن کم کرنے میں مدد دیتا ہے۔

وٹامن ‘سی’ اور ‘اے’ کا خزانہ
ہمارے جسم کو ہمیشہ مستحکم رہنے کے لئے متعدد قسم کے غذائی اجزاء کی ضرورت ہوتی ہے۔ یہ سب املی میں وافر مقدار میں پائے جاتے ہیں۔ لیکن وٹامن ‘سی’ اور وٹامن ‘اے’ زیادہ مقدار میں پائے جاتے ہیں۔ وٹامن ‘سی’ اور ‘اے’ نہ صرف نزلہ زکام ، یرقان جیسی بیماریوں سے چھٹکارا حاصل کرتے ہیں ، نیز آنکھوں سے متعلق مسائل کو بھی دور کرتے ہیں۔

نظام انہضام کو صحت مند بنائیں
اچھی اور صحت مند زندگی گزارنے کے لئے ، صحت مند ہاضمہ نظام کا ہونا بہت ضروری ہے۔ املی کا باقاعدگی سے استعمال آپ کے نظام ہاضم کو درست رکھتا ہے۔ املی کے استعمال سے بدہضمی ، قبض ، درد اور پیٹ کی سوجن جیسی پریشانیوں سے نجات ملتی ہے۔ آئرن ، کیلشیم ، مینگنیج ، فاسفورس ، پوٹاشیم اور فائبر جیسے معدنیات ، جو اس میں بھرپور ہوتے ہیں ، ہمارے جسم کو بھی فٹ رکھتے ہیں۔

دل کی بیماری میں مدد
املی کا رس دل سے متعلق بہت سی بیماریوں کا علاج کرتا ہے۔ اس کے استعمال سے ، آپ کے جسم میں بلڈ پریشر اور کولیسٹرول کی سطح کنٹرول میں رہتی ہے۔ املی کا رس جسم میں ایل ڈی ایل کی مقدار کو کم کرکے اینٹی آکسیڈینٹس کی سطح کو بڑھاتا ہے۔ اس میں موجود وٹامن سی ‘جسم میں اینٹی آکسیڈینٹ کا کام کرتا ہے اور آپ کے دل کو صحت مند اور تندرست رکھتا ہے۔

لہذا آپ نے دیکھا کہ املی آپ کے جسم کو صحت مند رکھنے میں کس طرح مدد کرتی ہے۔ اگر آپ بھی اپنے جسم کو ہمیشہ صحتمند رکھنا چاہتے ہیں تو آج سے املی کو اپنی روز مرہ کی خوراک میں شامل کریں۔ بہت سے لوگوں کو املی سے بھی الرجی ہوسکتی ہے ، لہذا اسے استعمال کرنے سے پہلے اپنے ڈاکٹر سے مشورہ کرنا نہ بھولیں

Iftikhar

My name is RIZWAN I AM Aarticle writer

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button