تاریخ

سوہنی دھرتی تجھے اللہ رکھے آباد

74 سال قبل جناح تجھے کر گیا آباد
لشکر حیوان ناطق نے تجھے کیا ہے برباد

حاصل کیا گیا تھا تجھے فروع اسلام کیلئے
مساجد ڈھا کر مندروں کی رکھی ہے بنیاد

پڑھ لکھ کر آتے ہیں یہ لندن یا امریکا سے
گڈریے اور چرواہے بھی ان کے ہیں استاد

ہر چھوٹا بڑا تجھے نوچنے میں مصروف ہے
کفر کا راستہ کھلا ہے مگر منع ہے جہاد

تیرے رکھوالوں نے کیے تھے تیرے حصے بخرے
اپنی اپنی جیت میں بڑے خوشی ہیں شداد

ان سے تو مخلص ہیں پر چوڑے اور چمار
معلوم نہیں ہے ان کو وہ کس کی ہیں اولاد

تجھے نوچنے والوں نے کوئی کسر نہیں چھوڑی
تو بھروسہ رکھ ذرا حدا پر اور ہو نہ تو ناشاد

مٹانے والے تھے تجھے خود مٹ جائیں گے اک دن
بفضل خدا قیامت تک تو نے رہنا ہے آباد

سپر سپاٹے بیرونی دورے ہیں بڑے مجبو ب
سیلاب زلزلوں میں بھی نہ رکھیں تجھے یاد

مصلی لوٹا کسی نے کبھی نہ رکھا مسجد میں
یہود کا کوئی ہے ایجنٹ تو کوئی ہے داماد

I 'm psychologist ,motivational writer and articale writer.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
info@newzflex.com-اگر آپ اپنے پسندیدہ موضوع کو ویڈیو کی صورت میں دیکھنا چاہتے ہیں تو ہمیں اپنی پسند سے آگاہ کرنے کیلیے اس ایڈریس پر ای میل کیجیےLike & Subscribe the Newz_Flex Channel
error: Content is protected !!