سیاحت

Rohat Fort been allotted Rs 1.25 billion for facilities

روہت قلعہ کو سہولیات کے لیے 1.25 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں۔

روہت قلعہ کو سہولیات کے لیے 1.25 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں۔

اعلی معیار کی سیاحتی سہولیات اور روہتاس قلعہ کے آس پاس سڑک کی مرمت کے لیے ، پنجاب انتظامیہ نے 1.25 بلین ڈالر کا وعدہ کیا ہے۔پاکستان کا دوسرا سب سے بڑا قلعہ جو کہ تاریخی اہمیت کا حامل ہے ، کو صوبائی حکومت کی حکمت عملی کے تحت جدید ترین سیاحتی سہولیات مہیا کی جانی ہیں جو کہ تاریخی آبرو کے تحفظ اور بحالی کے لیے ہیں۔

ضلع جہلم میں 12 دروازوں والا قلعہ 12 ایکڑ پر پھیلا ہوا ہے اور تاریخ سے مالا مال ہے۔ شیر شاہ سوری کے بہادر جنرل اور فصیح بیٹے خواص خان مروت کو جی ٹی روڈ پر قلعے میں خاص طور پر داخلے سے منسوب کیا گیا ہے جبکہ کینٹینا کے قریب دروازے کو اپنی خوبصورت نیلی اینٹوں سے مزین شیشے کے پورچ کی وجہ سے یاد کیا جاتا ہے۔

Rohat Fort been allotted Rs 1.25 billion for facilities

For high-quality tourism amenities and road repair around Rohtas Fort, the Punjab administration has committed $1.25 billion.

The second-largest fort in Pakistan, which is of historical importance, is to be given the newest touristic amenities under the provincial government’s strategy for the protection and restoration of historic patrimony.

In the Jhelum district, the 12-door fort extends over 12 acres and is rich in history. Khawas Khan Marwat, the valiant general and eloquent son of Sher Shah Suri has attributed the actual entry to the fort on GT Road while the door near the cantina remembers the glass porch embellished with its beautiful blue bricks.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
error: Content is protected !!