وائرل نیوز

58 Years Old ‘Abdul Rasheed’ Dresses Up As A Spider-Man and Entertain Kids on the Streets of Karachi In Order To Earn Some Money

58 سالہ عبدالرشید سپائیڈر مین کا لباس پہن کر کراچی کی سڑکوں پر بچوں کی تفریح ​​کرتا ہے تاکہ کچھ پیسے کمائے جا سکیں

حال ہی میں انٹرنیٹ پر ایک بوڑھے شخص کی ایک ویڈیو وائرل ہوئی ہے جس میں اس نے مہنگائی کے دور میں زندگی گزارنے کی جدوجہد کی اپنی کہانی شیئر کی ہے۔ 58 سالہ عبدالرشید، صرف چھٹی جماعت کی تعلیم کے ساتھ کراچی کی سڑکوں پر پیسہ کما رہا ہے، جہاں وہ اسپائیڈر مین کا لباس پہن کر سڑکوں پر گزرنے والے بچوں کی تفریح ​​کرتا ہے۔

عبدالرشید نے بتایا کہ وہ اپنے گھر سے بہت دور چل کر آغا خان ہسپتال، کراچی کے قریب ایک مخصوص مقام پر پہنچے جہاں بہت سے بچوں کے ساتھ لوگوں نے اسے مکڑی انسان کے طور پر دیکھا اور پیسے دیتے ہوئے اس کی مدد کی۔ رشید کئی لگژری ہوٹلوں میں کام کر چکے ہیں لیکن وبائی امراض کی وجہ سے ان کی زندگی ہی اُلٹ پلٹ گئی جہاں تنخواہ میں کمی نے انہیں کوئی اور کام کرنے سے بے بس کر دیا۔ رشید کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا اور وہ قرض میں ڈوب گئے۔ اس نے اپنے رشتہ داروں اور پڑوسیوں سے 1 لاکھ سے زائد کا قرض لیا اور وہ اسے واپس کرنے سے قاصر ہے۔ اس وجہ سے اس نے اسپائیڈر مین کا لباس خریدا جو کہ اس کے اپنے پیسوں کا نہیں تھا، اس نے اپنے دوست سے پیسے لے کر خرید لیا۔

رشید کا ایک بڑا خاندان ہے لیکن سب مانسہرہ میں رہتے ہیں۔ تاہم، وہ اکثر کراچی آتا ہے اور گزشتہ ڈیڑھ سال سے اپنے خاندان کو نہیں دیکھا تھا۔ اس نے چند سال قبل اپنی بیوی کو کھو دیا تھا لیکن وہ کئی مشکلات کے علاوہ اپنے خاندان کی خود کفالت کرتا ہے۔ کرونا وائرس کی وجہ سے رشید بہت زیادہ قرض میں ڈوب گیا ہے۔ تاہم، وہ اپنے قرض کی واپسی اور کالج کی فیس ادا کرنے کے لیے اپنے بچوں کی مالی مدد کرنے کے لیے پریشان ہے۔ رشید ہمارے معاشرے کے ایک ہیرو سے کم نہیں جس نے اس عمر میں بھی ہمت نہیں ہاری اور اس مشکل وقت میں زندہ رہنے کے لیے بہت محنت کر رہے ہیں۔

58 Years Old ‘Abdul Rasheed’ Dresses Up As A Spider-Man and Entertain Kids on the Streets of Karachi In Order To Earn Some Money

Recently, a video of an old man has gone viral on the web where he shared his story of struggling to measure in a very time of inflation. Abdul Rasheed, a 58 Years old man with only 6th-grade education is earning money on the streets of Karachi, where he dressed up as a spider-man and entertains the children passing by on the roads.

Abdul Rasheed stated that he walked aloof from his house and is available to a particular location near Aga Khan Hospital, Karachi where many of us with kids saw him as a spider-man and helps him while giving money. Rasheed has worked in many luxury hotels but thanks to the pandemic, his life went the other way up to where his pay decrease made him helpless to try to do the other work.

Rasheed faced hardship and got heavily in debt. He took over 1 lac as a loan from his relatives and neighbors and is unable to pay it back. because of this, he purchased a spider-man costume which again wasn’t of his own money, he took money from his friend and purchased it. Rasheed contains a big family but all board Mansehra; however, he involves Karachi frequently and had not seen his family for the last one and half years. He lost his wife some years back but supports his family on his own other than several hardships.

Due to the coronavirus pandemic, Rasheed has gone into huge debt; however, he’s worried to pay back his loan and financially support his kids to pay their college fees. Rasheed is not any but a hero of our society who at this age didn’t quit and is functioning really hard to survive during this hard time.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
error: Content is protected !!