BUSINESSFEATURED

Why you Need a VPN for Crypto Trading in 2022

آپ کو 2022 میں کرپٹو ٹریڈنگ کے لیے وی پی این کی ضرورت کیوں ہے۔

کیا آپ جانتے ہیں کہ کرپٹو ہیکرز نے 2021 میں سائبر حملوں میں کل 2.99 بلین ڈالر چوری کیے ہیں؟اورکرپٹو کرنسی کے ارد گرد سخت سیکورٹی کے باوجود، یہ تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے۔

کریپٹو کرنسیوں میں بڑھتی ہوئی دلچسپی کے ساتھ—نہ صرف اثاثے خریدنے یا بیچنے کے لیے بلکہ سرمایہ کاری کرنے کے لیے بھی، بہت سے لوگ کرپٹو ڈیبلرز کی ٹرین میں سوار ہو رہے ہیں۔ اور کیوں نہیں، یہ بلاک چین ٹیکنالوجی پر مبنی ہے جو اسے ایک غیر مرکزی بازار بناتی ہے —اور یہ کسی کے ذریعہ ریگولیٹ نہیں ہوتی۔ لیکن یہ خطرات کے چند ممکنہ سیٹ کے ساتھ سامنے آتی ہے، خاص طور پر ہیکنگ اور سیکیورٹی سے متعلق۔ یہ وہ جگہ ہے جہاں کرپٹو کے لیے وی پی این کا استعمال ممکنہ نقصانات کو کم کرنے اور اضافی رازداری فراہم کرنے میں مدد کر سکتا ہے۔

کوئی بھی اپنی پرائیویسی شیلڈ میں رساو نہیں چاہتا۔ اپنی گمنامی کو بڑھانے اور آن لائن محفوظ رہنے کے لیے، آپ کی بہترین شرط یہ ہے کہ ایک ایسا وی پی این استعمال کریں جو کرپٹو کرنسی کے لین دین کو قبول کرے۔ بٹ کوائین کے ساتھ اپنے وی پی این کی ادائیگی کر کے، آپ اپنے نام کو چیزوں سے دور رکھ سکتے ہیں اور جہاں کہیں بھی جائیں سخت سیکیورٹی سے لطف اندوز ہو سکتے ہیں۔

کرپٹو ٹریڈنگ اور اس سے متعلقہ خطرات کیا ہیں؟
روایتی جسمانی کرنسی کی طرح استعمال ہونے کے علاوہ، کرپٹو کو تجارت کے لیے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔ دنیا بھر کے مختلف ممالک میں متعدد مارکیٹیں موجود ہیں جو مختلف کریپٹو کرنسیوں میں تجارت کی اجازت دیتی ہیں۔ لوگ اسٹاک مارکیٹوں کے برعکس کسی بھی وقت اور کسی بھی ٹائم زون میں تجارت کر سکتے ہیں۔چونکہ کرپٹو غیر منظم ہے، اس لیے یہ اپنے خطرات کے ساتھ آتا ہے۔ چونکہ لین دین ناقابل واپسی ہیں اور ان کا سراغ نہیں لگایا جا سکتا، اس لیے یہ ان ہیکرز کو ایک کنارے فراہم کرتا ہے جو ان کمزوریوں کا فائدہ اٹھاتے ہیں۔لہذا، ہمیں کرپٹو خریدتے وقت کچھ حفاظتی خطرات سے آگاہ ہونا چاہیے۔

جعلی کریپٹو ٹریڈنگ ایکسچینجز سے ہوشیار رہیں جو تجارتی حجم اور اعدادوشمار میں ہیرا پھیری کرکے لوگوں کو ان بورڈ میں لے جاتے ہیں جو ابھی بھی کرپٹو ٹریڈنگ میں نئے ہیں۔ کرپٹو جیسی غیر مستحکم مارکیٹ سے نمٹنے کے دوران بھروسہ مند پلیٹ فارمز کے ساتھ رہنا بہتر ہے۔ ہیکرز آپ کے آلے کو خراب کر سکتے ہیں اور آپ کے اکاؤنٹ سے کریپٹو کرنسیوں کی کان کنی کے لیے سسٹم پر مائننگ سافٹ ویئر انسٹال کر سکتے ہیں اور تمام رقوم خود کو منتقل کر سکتے ہیں۔ اسے کرپٹو جیکنگ کے نام سے جانا جاتا ہے جس میں میلویئر آپ کے اکاؤنٹ کا تقریباً مکمل صفایا کر سکتا ہے۔ اعداد و شمار بتاتے ہیں کہ 2020 میں کرپٹو جیکنگ کے کیسز میں 28% اضافہ ہوا جو تاجروں نے اضافی احتیاط برتیں۔ہیکرز سکے کی ایک کاپی بناتے ہیں اور اصل کو اپنے پاس رکھتے ہوئے اسے لین دین کے لیے استعمال کرتے ہیں۔

کرپٹو کے لیے ورچوئل پرائیویٹ نیٹ ورک استعمال کرنے کی وجوہات
یہ ایک عام غلط فہمی ہے کہ کرپٹو صارف کو مکمل گمنامی فراہم کرتا ہے۔ یہ آپ کی پرائیویسی میں کافی حد تک اضافہ کرتا ہے لیکن پھر بھی آپ کے آئی پی ایڈریس کے ذریعے کسی بھی ادارے (ہیکرز، حکومت وغیرہ) کے ذریعے اس کا سراغ لگایا جا سکتا ہے۔ اگر آپ کا تجارتی پلیٹ فارم دستاویز کی تصدیق کے لیے کہتا ہے تو یہ تقریباً یقینی ہے کہ پلیٹ فارم کے ذریعے آپ کی شناخت کا پتہ لگایا جا سکتا ہے۔

ایک وی پی این آپ کے آن لائن ڈیٹا کو خفیہ کاری کے ذریعے محفوظ کرتا ہے اور آپ کی شناخت کی حفاظت کرتا ہے۔ واضح رہے کہ وی پی این بھی مکمل گمنامی فراہم نہیں کر سکتا لیکن اس کے اضافی فوائد کے ذریعے آپ بغیر کسی پریشانی کے کرپٹو خرید سکتے ہیں۔ ان میں سے کچھ یہ ہیں-

وی پی این آپ کی ٹریفک کو محفوظ بناتا ہے۔
اس بات کا امکان ہے کہ آپ کرپٹو تجارت کرنے کے لیے نجی وائی فائی کنکشن استعمال کرتے ہیں جو تقریباً کوئی سیکیورٹی پیش نہیں کرتے۔ ہیکرز آسانی سے آپ کے مقام کا پتہ لگا سکتے ہیں اور یہاں تک کہ آپ کے لاگ ان کی اسناد پر بھی ہاتھ ڈال سکتے ہیں!

وی پی این آپ کے آن لائن ٹریفک/ڈیٹا کو خفیہ کرتا ہے اور اسے ناقابل فہم بنا دیتا ہے۔ یہ آپ کے آئی پی ایڈریس کو بھی چھپاتا ہے اور آپ کے ٹریفک کو کسی دوسرے مقام سے روٹ کرتا ہے جو میل دور ہوسکتا ہے۔ یہ کسی کے لیے بھی آپ کی آن لائن سرگرمیوں کو ٹریک کرنا تقریباً ناممکن بنا دیتا ہے۔ لہذا اگر میں کینیڈا میں بیٹھا ہوں، تو ایک وی پی این میری ٹریفک کو امریکہ یا جاپان یا نیپال سے روٹ کر سکتا ہے۔

فشنگ حملوں سے تحفظ
فشنگ بظاہر قابل اعتماد ذریعہ سے دھوکہ دہی والے پیغامات بھیجنا ہے۔ فشنگ سب سے عام طریقوں میں سے ایک ہے جس میں ہیکرز کرپٹو اثاثے چوری کرتے ہیں۔ سالوں کے دوران، فشنگ حملوں میں بتدریج اضافہ ہوا ہے، ہر سہ ماہی میں تقریباً 3%۔اگرچہ ایک وی پی این آپ کو فریب دہی کے حملوں سے مکمل طور پر محفوظ نہیں رکھ سکتا، یہ کچھ ویب سائٹس کو بلاک کر دیتا ہے جو ممکنہ طور پر بدنیتی پر مبنی ہو سکتی ہیں۔ یہ آپ کی ٹریڈنگ کے لیے سیکیورٹی کی ایک اضافی پرت کے طور پر کام کرتا ہے۔

آپ کے انٹرنیٹ سروس پرووائیڈر سے کرپٹو سرگرمیاں چھپاتا ہے
آپ کا انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والا یہ نہیں جانتا ہو گا کہ آپ نے کتنے بٹ کوائن خریدے یا بیچے لیکن وہ یہ ضرور جان سکتا ہے کہ آپ کون سا ٹریڈنگ پلیٹ فارم استعمال کرتے ہیں اور آپ نے کس وقت لاگ ان کیا ہے۔ لیکن اگر آپ وی پی این استعمال کرتے ہیں تو آپ کا آئی ایس پی صرف وی پی این سرور کا ائی پی ایڈریس دیکھے گا۔ آپ کرپٹو ویب سائٹ کے بجائے استعمال کرتے ہیں۔ چونکہ وی پی این تمام آن لائن ڈیٹا کو خفیہ کرتا ہے، اس لیے آئی ایس پی آپ کے کنکشن میں ہیرا پھیری نہیں کر سکتا۔

جیو سے محدود تجارتی سائٹس کو غیر مسدود کرتا ہے۔
کرپٹو ٹریڈنگ پلیٹ فارمز پر جیو پابندیاں ہیں جن میں بعض ممالک کے صارفین مخصوص کرپٹو ٹریڈنگ سائٹ پر مخصوص آلٹکوائین میں تجارت نہیں کر سکتے ہیں۔ یہ اس پلیٹ فارم کے لحاظ سے مختلف ہو سکتا ہے جسے وہ لین دین کے لیے استعمال کرتے ہیں۔ چونکہ وی پی این آپ کا حقیقی آئی پی ایڈریس چھپاتا ہے، تجارتی پلیٹ فارم آپ کے جغرافیائی محل وقوع کو نہیں جان سکتا اور اس وجہ سے وہ آپ کو سائٹ پر تجارت کرنے سے نہیں روک سکے گا۔

وی پی این کا انتخاب کیسے کریں؟
اب ہم جانتے ہیں کہ کس طرح وی پی این ہمارے ڈیٹا کی حفاظت اور رازداری کو برقرار رکھنے کے لیے بہت سے طریقوں سے ہماری مدد کر سکتا ہے لیکن اگلا مرحلہ یہ ہے کہ صحیح وی پی این کا انتخاب کیسے کیا جائے۔ مارکیٹ مختلف خصوصیات اور قیمتوں کی پیشکش کرنے والے وی پی این سے بھری ہوئی ہے، تو ہم کیسے انتخاب کریں؟کرپٹو کے لیے وی پی این کا انتخاب کرتے وقت، یہ ضروری ہے کہ آپ چار خصوصیات کو تلاش کریں جو آپ کے کرپٹو کے استعمال کے مطابق ہوں اور آپ کے تمام ڈیٹا کو محفوظ بنائیں۔ ان میں سے کچھ یہ ہیں-

ہنگامی اخراج کا بٹن
اگر آپ کاوی پی این کنکشن کم ہو جاتا ہے، یہاں تک کہ صرف چند سیکنڈوں کے لیے- آپ کا کرپٹو ٹریڈنگ ڈیٹا بے نقاب ہو جائے گا جو آپ کے مقام اور شناخت کو ٹریک کرنے کا باعث بنے گا۔ کِل سوئچ ایک ایسی خصوصیت ہے جو وی پی این کے کم ہونے پر آپ کی انٹرنیٹ تک رسائی کو بند کر دیتی ہے اور یہ آپ کی رازداری کو برقرار رکھنے کا ایک اچھا طریقہ ہے۔

کوئی لاگز نہیں۔
ایک وی پی این ہیکرز یا حکومت یا کسی دوسرے فریق کو آپ کے آن لائن ڈیٹا کی نگرانی کرنے سے بچ سکتا ہے لیکن وی پی این فراہم کنندہ کے پاس پھر بھی آپ کی آن لائن سرگرمیوں کے لاگز ہو سکتے ہیں۔ لہٰذا، بہتر ہے کہ کسی ایسے وی پی این کے ساتھ چلیں جس میں نو لاگز پالیسی ہو جس میں اسے ثابت کرنے کے لیے کافی دعوے ہوں۔ (کسی کو نہیں چاہتے

نتیجہ
یہ بالکل واضح ہے کہ وی پی این خاص طور پر کرپٹو ٹریڈنگ کے لیے کتنا اہم ہے- جہاں سیکیورٹی اور رازداری کے خطرات کافی ہیں۔ یہ آپ کا آئی پی ایڈریس چھپاتا ہے، فشنگ حملوں اور مالویئر سے تحفظ فراہم کرتا ہے اور مختلف ممالک میں پلیٹ فارمز پر تجارت کرنے کی آزادی دیتا ہے۔لہذا دانشمندی سے انتخاب کریں اور ایسا وی پی این استعمال کریں جو رازداری کے تحفظ کو بڑھاتا ہے اور آپ کے ڈیٹا کو کسی سے بھی، حتیٰ کہ خود بھی محفوظ رکھتا ہے۔

Why you Need a VPN for Crypto Trading in 2022

Did you recognize that crypto hackers have stolen a complete of $2.99 billion in cyber attacks in 2021? And despite the tight security around decentralized cryptocurrency, this number continues to grow.

With an increased interest in cryptocurrencies—not only for buying or selling assets but also for creating investments, many of us are hopping on the train of crypto dabblers. And why not, it’s supported blockchain technology which makes it a decentralized marketplace—not regulated by anyone.

Stay completely anonymous with these cryptocurrency-accepting VPNs:

NordVPN – Best Crypto-Friendly VPN – NordVPN’s been around the block a few times, and it knows how to make its users happy and safe. They accept anonymous payment through Bitcoin, offering zero logs, military-grade encryption, and so much more.

Surfshark – A new VPN that has collated all the best practices and features of past providers into one scintillating privacy package. Dirt cheap.

ExpressVPN – Not dirt cheap, but worth every penny. Fast speeds, incredible network, good fail-safes.

PureVPN – The jack-of-all-trades with some extra focus on unblocking censorship like China’s Great Firewall.

StrongVPN – Well-establish provider trusted by thousands of users worldwide. Reliable, tough as nails.

But it also comes with its own set of risks, particularly associated with hacking and security. this is often where employing a VPN for crypto can help in reducing potential losses and supply added privacy. Nobody wants a leak in their privacy shield. to spice up your anonymity and stay safe online, your best bet is to use a VPN that accepts cryptocurrency transactions. By paying for your VPN with Bitcoin, you’ll keep your name out of things and luxuriate in heightened security everywhere you go.

What are crypto trading and its related risks?
Other than getting used sort of a traditional physical currency, crypto may also be used for trading. There are numerous markets located in several countries around the world that allow trading in numerous cryptocurrencies. People can trade at any time and across any zone, unlike stock markets.

Since crypto is unregulated, it comes with its own set of risks. because the transactions are irreversible and can’t be traced, it gives a footing to hackers who exploit these vulnerabilities. Therefore, we must remember some security risks while buying crypto. Beware of fake crypto trading exchanges that trick people by manipulating trading volume and stats to onboard people that are still unaccustomed to crypto trading. It’s better to stay with trusted platforms when managing a volatile market like crypto.

Hackers can corrupt your device and install mining software on the system to mine cryptocurrencies from your account and transfer all funds to themselves. this is often referred to as crypto-jacking wherein malware can wipe almost the whole thing of your account. Statistics suggest that in 2020 crypto-jacking cases increased by 28% leading traders to practice extra caution.
Hackers make a replica of the coin and use it for creating transactions while keeping the initial one for themselves. this can be called double-spending– a possible risk in crypto trading.

Reasons to Use a Virtual Private Network (VPN) for crypto
It is a standard misconception that crypto provides complete anonymity to the user. It does increase your privacy to an oversized extent but remains traceable by any entity (hackers, government, etc.) through your IP address. If your trading platform asks for document verification then it’s almost certain that your identity is traceable through the platform.

A VPN secures your online data through encryption and safeguards your identity. It must be noted that even VPN can’t provide complete anonymity but through its added advantages you’ll buy crypto without much worry. a number of these are-

VPN Secures Your Traffic
It’s likely that you simply use a private wifi connection to create crypto trades that supply almost no security. Hackers can easily trace your location and even get their hands on your login credentials!

VPN encrypts your online traffic/data and makes it indecipherable. It also hides your IP address and reroutes your traffic from another location that would be miles away. This makes it almost impossible for anyone to trace your online activities. So if I’m sitting in Canada, a VPN might reroute my traffic from the US-Japan, or Nepal.

Protection from Phishing Attacks
Phishing is the sending of fraudulent messages from a seemingly trustworthy source. Phishing is one of every of the foremost common ways during which hackers steal crypto assets. Over the years, there has been a gradual increase in phishing attacks, approximately by 3% quarterly.

While a VPN may not completely protect you from phishing attacks, it does block certain websites which will be potentially malicious. This acts as an extra layer of security for your trading.

Hides crypto activities from your Internet Service Provider (ISP)
Your internet service provider might not understand how much bitcoin you purchased or sold but they’ll definitely know which trading platform you employ and at what time you logged in. But if you utilize VPN, your ISP will only see the IP address of the VPN server you employ rather than the crypto website. Since VPN encrypts all online data, the ISP can’t manipulate your connection.

Unblocks Geo-restricted trading sites
There are geo-restrictions on crypto trading platforms wherein users from certain countries might not be able to interchange certain altcoins (crypto aside from bitcoin) on a specific crypto trading site. this will vary depending upon the platform they use for creating transactions. A VPN hides your real IP address, the trading platform cannot know your geolocation and hence won’t be ready to stop you from trading on the location.

How to choose a VPN?
Now we all know how VPN can help us in such a big amount of ways to safeguard our data and maintain privacy but the following step is a way to choose the correct VPN. The market is flooded with VPNs offering different features and costs, so how can we choose?

While choosing a VPN for crypto, it’s important to appear for four features that will fit your crypto use and can secure all of your data. a number of these are-

Kill Switch
In case your VPN connection goes down, even only for seconds– your crypto trading data are going to be exposed which can cause the tracking of your location and identity. A kill switch may be a feature that shuts your internet access when the VPN goes down and maybe a great way to keep up your privacy.

No Logs
A VPN may avoid hackers the government or the other third party from monitoring your online data but the VPN provider should have logs of your online activities. Hence, it’s better to travel with a VPN that features a no-logs policy with adequate claims to prove it. (Don’t want anyone selling our data to advertisers now, do we?)

Split Tunneling
It is true that employing a VPN can slow your internet connection– which are some things you don’t want especially while crypto trading. Split tunneling could be a feature that leaves some traffic out of the VPN tunnel. this suggests that you simply use a VPN to only encrypt data while crypto trading. Since there’ll be fewer data to encrypt for the server, the connection is going to be stable and smooth.

Base Country of VPN
It is vital to notice the country from which the VPN has originated and where it operates. Most of the highest VPN providers come from countries with no mass surveillance program just like the British island, Switzerland, and Panama (where top-rated NordVPN came from).

But it’s not wrong to be wary of VPN providers from countries with heavy surveillance programs just like the USA Canada or the united kingdom who can turn over your data if asked by surveillance agencies. this can be also the explanation why you must not trust a free VPN whether or not the thought sounds tempting.

The Bottom Line
It is quite obvious how important a VPN is particularly for crypto trading– where security and privacy risks are plenty. It hides your IP address, provides protection from phishing attacks and malware, and provides the liberty to trade on platforms in several countries. So choose wisely and use a VPN that enhances privacy protection and safeguards your data from anyone, even itself.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Check Also
Close
Back to top button