TOURISM

Exploring the Very Beautiful Kumrat Valley of Khyber Pakhtunkhwa

خیبرپختونخوا کی انتہائی خوبصورت وادی کمراٹ کی سیر

Home to several breathtaking scenic spots, Pakistan is a veritable wonderland of natural marvels. Almost every region of this country is dotted with dozens of natural attractions and historical sites that each adventure-seeker should visit once. Khyber Pakhtunkhwa, which is a province located in north-western Pakistan, is a land ruled by mighty mountains. Hidden among these magnificent geological formations, you may find a number of the foremost beautiful valleys on earth, one in every which is Kumrat Valley.

In this ARTICLE, we are going to be discussing some key belongings you should know before planning your trip to this nature’s wonderland. But, first of all, let’s get familiar with the valley itself.

ABOUT KUMRAT VALLEY
Tucked away in the paradisiac land of Upper Dir District in KPK, the valley of Kumrat is inarguably one of the most scenic valleys on this planet. it’s a magical land of waterfalls, lush green pastures, freshwater springs, colossal mountains, fast-flowing gushing rivers, and peaceful lakes. The land is dominated by the vegetation of Deodar Trees. The place is additionally counted among the most effective places to go to in Khyber Pakhtunkhwa. thanks to its immense natural beauty, Kumrat is often dubbed ‘heaven on earth by many who visit. Camping, bonfire, boating, trekking, climbing; this place offers everything that an adventure seeker looks for while traveling.

HOW TO GET TO KUMRAT VALLEY?
As we already mentioned the valley of Kumrat is located in KPK’s Upper Dir District so while getting there you’ll get to experience a mix of carpeted roads and dusty pathways. The closest town to the valley is Thall.

So, to reach Kumrat from any city in Pakistan, you initially need to get to the town of Thall, which is famously referred to as the doorway to the valley. Trip organizers to Kumrat often use it as a launching point. From Thall, you have got to require the route of Utrar Road, which is actually a roller-coaster of twists and turns thanks to the mountainous landscape of the region.

While traveling from Kalam in Swat Valley to a bazaar in Utrar, a little town in KPK, you’ll hire a shared taxi, the price of which is PKR 400-500 per person. However, from Utrar Bazaar to Thall, you wish to require a 4X4 Jeep, which is able to even be shared by other passengers, costing you PKR 1,000 per person. Finally, to induce to your destination, you have got to rent a jeep; now a non-public one with a driver which will cost you somewhere around PKR 4,000-6,000. the price of those rides may vary looking on the season and therefore the weather.

WHERE TO REMAIN IN KUMRAT VALLEY?

Why choose hotels in Kumrat Valley after you can spend an evening camping? Actually, this place offers two options for an overnight stay, you’ll be able to either hire a camp that’s rock bottom somewhere around PKR 2,500 per night otherwise you can select the choice of hotels in Kumrat Valley. The price of a hotel room per night starts from as low as PKR 5000. These rates may also vary during the height season of tourism that comes twice a year during summers and winters.

PLACES TO DETERMINE IN KUMRAT VALLEY
Even if you have got been to this heavenly place in Khyber Pakhtunkwa, we bet you continue to haven’t seen all of its tourist attractions. There are actually dozens of places to work out in Kumrat Valley. Wooden Canals, Dojanga, Panjkora River, Waterfall in Jahaz Banda, Do Kala Chasma, Badagoi Pass, Chahrot Banda, Trek to Katora Lake, and Jandrai Village are a number of the foremost beautiful spots in this area to say during this regard.

WEATHER IN KUMRAT VALLEY
Clouds dominate the skies within the valley of Kumrat most time of the year. The place experiences heavy rainfall during the season of monsoon. Similarly, it can get extremely chilly and snowy during winters. in an exceeding nutshell, the weather in Kumrat Valley stays pleasant almost throughout the year, which makes it one of the simplest places to go to in Khyber Pakhtunkhwa.

The Bottom Line:

People visiting Kumrat Valley are advised to plan their travel capsule wardrobe after checking the weather forecast for the upcoming season.

خیبرپختونخوا کی انتہائی خوبصورت وادی کمراٹ کی سیر

بہت سے دلکش قدرتی مقامات کا گھر، پاکستان قدرتی عجائبات کا ایک حقیقی عجوبہ ہے۔ اس ملک کا تقریباً ہر خطہ درجنوں قدرتی پرکشش مقامات اور تاریخی مقامات سے بھرا ہوا ہے جہاں ہر ایڈونچر کے متلاشی کو ایک بار ضرور جانا چاہیے۔ خیبرپختونخوا، جو کہ شمال مغربی پاکستان میں واقع ایک صوبہ ہے، ایک ایسی سرزمین ہے جس پر طاقتور پہاڑوں کی حکمرانی ہے۔ ان شاندار جیولوجیکل فارمیشنز کے درمیان پوشیدہ، آپ کو زمین کی کچھ خوبصورت وادیاں ملیں گی، جن میں سے ایک وادی کمراٹ ہے۔

اس آرٹیکل میں، ہم کچھ اہم چیزوں پر تبادلہ خیال کریں گے جو آپ کو فطرت کے اس عجائب گھر کے سفر کی منصوبہ بندی کرنے سے پہلے جاننا چاہیے۔ لیکن، سب سے پہلے، آئیے خود وادی سے واقف ہوں۔

کمراٹ ویلی کے بارے میں
کے پی کے کے ضلع اپر دیر کی جنتی سرزمین میں واقع وادی کمراٹ بلا شبہ اس سیارے کی سب سے خوبصورت وادیوں میں سے ایک ہے۔ یہ آبشاروں، سرسبز و شاداب چراگاہوں، میٹھے پانی کے چشموں، بڑے پہاڑوں، تیزی سے بہتے ہوئے دریاؤں اور پرامن جھیلوں کی جادوئی سرزمین ہے۔ زمین پر دیودار کے درختوں کی پودوں کا غلبہ ہے۔ اس جگہ کا شمار بھی خیبرپختونخوا میں سیر کے لیے بہترین مقامات میں ہوتا ہے۔ اپنی بے پناہ قدرتی خوبصورتی کی وجہ سے، کمراٹ کو اکثر آنے والے بہت سے لوگ ‘زمین پر جنت’ کہتے ہیں۔ کیمپنگ، الاؤ، بوٹنگ، ٹریکنگ، چڑھنا؛ یہ جگہ ہر وہ چیز پیش کرتی ہے جو ایڈونچر کا متلاشی سفر کے دوران تلاش کرتا ہے۔

وادی کمراٹ تک کیسے جائیں؟
جیسا کہ ہم نے پہلے ہی بتایا ہے کہ کمراٹ کی وادی کے پی کے کے ضلع اپر دیر میں واقع ہے اس لیے وہاں پہنچتے وقت آپ کو کارپٹ شدہ سڑکوں اور دھول آلود راستوں کے آمیزے کا تجربہ ہوگا۔ وادی کا قریب ترین شہر تھل ہے۔

لہذا، پاکستان کے کسی بھی شہر سے کمراٹ پہنچنے کے لیے، آپ کو سب سے پہلے تھل کے قصبے میں جانا ہوگا، جو وادی کے داخلی راستے کے نام سے مشہور ہے۔ کمراٹ کے ٹرپ آرگنائزر اکثر اسے لانچنگ پوائنٹ کے طور پر استعمال کرتے ہیں۔ تھل سے، آپ کو اترر روڈ کا راستہ اختیار کرنا ہوگا، جو کہ علاقے کے پہاڑی مناظر کی وجہ سے درحقیقت موڑ اور موڑ کا ایک رولر کوسٹر ہے۔

وادی سوات میں کالام سےکے پی کے کے ایک چھوٹے سے شہر اترار کے بازار تک سفر کرتے ہوئے، آپ مشترکہ ٹیکسی کرایہ پر لے سکتے ہیں، جس کی قیمت روپے 400-500 فی شخص ہے۔ تاہم، اترار بازار سے تھل تک، آپ کو 4بائی4 جیپ لینے کی ضرورت ہے، جسے دوسرے مسافر بھی شریک کریں گے، جس کی قیمت فی شخص 1000 روپے ہے۔ آخر میں، اپنی منزل تک پہنچنے کے لیے، آپ کو ایک جیپ کرایہ پر لینا ہوگی۔ اس بار ڈرائیور کے ساتھ ایک پرائیویٹ جس کی قیمت آپ کو تقریباً روپے 4,000-6,000 ہوگی۔ ان سواریوں کی قیمت موسم اور موسم کے لحاظ سے مختلف ہو سکتی ہے۔

کمراٹ ویلی میں کہاں رہنا ہے؟
کمراٹ ویلی میں ہوٹلوں میں کیوں جائیں جب آپ رات کیمپنگ کر سکتے ہیں؟ درحقیقت، یہ جگہ رات بھر قیام کے لیے دو اختیارات پیش کرتی ہے، آپ یا تو ایک کیمپ کرایہ پر لے سکتے ہیں جو کہیں بہت سستا ہو تقریباً 2500 روپے فی رات یا آپ کمراٹ ویلی میں ہوٹلوں کے آپشن کے لیے جا سکتے ہیں۔ ایک ہوٹل کے کمرے کی فی رات کی قیمت روپے 5000 سے کم سے شروع ہوتی ہے۔ یہ قیمتیں سیاحت کے چوٹی کے موسم میں بھی مختلف ہو سکتی ہیں جو سال میں دو بار گرمیوں اور سردیوں میں آتا ہے۔

وادی کمراٹ میں دیکھنے کے لیے مقامات
یہاں تک کہ اگر آپ خیبر پختونخواہ کے اس آسمانی مقام پر گئے ہیں، ہم شرط لگاتے ہیں کہ آپ نے ابھی تک اس کے تمام سیاحتی مقامات نہیں دیکھے ہوں گے۔ وادی کمراٹ میں دیکھنے کے لیے درحقیقت درجنوں مقامات ہیں۔ لکڑی کی نہریں، دوجنگہ، دریائے پنجکوڑا، جھاز بانڈہ میں آبشار، دو کالا چشمہ، بڈاگوئی پاس، چہروٹ بانڈہ، کٹورا جھیل تک کا ٹریک، جندرائی گاؤں اس علاقے کے چند خوبصورت مقامات ہیں جن کا اس حوالے سے ذکر کرنا ضروری ہے۔

وادی کمراٹ میں موسم
وادی کمراٹ میں سال کے زیادہ تر وقت آسمان پر بادل چھائے رہتے ہیں۔ اس جگہ میں مون سون کے موسم میں شدید بارشیں ہوتی ہیں۔ اسی طرح، سردیوں کے دوران انتہائی سردی اور برف باری ہو سکتی ہے۔ مختصراً، وادی کمراٹ کا موسم تقریباً سارا سال خوشگوار رہتا ہے، جس کی وجہ سے یہ خیبرپختونخوا میں سیر کے لیے بہترین مقامات میں سے ایک ہے۔

وادی کمراٹ کا دورہ کرنے والے لوگوں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ آنے والے سیزن کے لیے موسم کی پیشن گوئی کو چیک کرنے کے بعد اپنے سفر کی منصوبہ بندی کریں۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button