اسلامک

“بسم اللہ الرحمٰن رحیم” کی تلاوت کے فوائد

اگر ہم “بسم اللہ الرحمٰن رحیم” کی تلاوت کے فوائد کا ایک عمدہ بیان دیتے تو اس کے ساتھ انصاف کرنے کے لیے ہمیں ایک حجم سے زیادہ کی ضرورت ہوگی۔ نوبل قرآن کے ہر باب کا حصہ بننے کے علاوہ (سوائے باب توبہ – سورہ توبہ) کے علاوہ ، یہ بھی قرآن مجید میں سب سے زیادہ بار بار آیت آتی ہے۔

تفسیر برہان میں روایت ہے کہ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ہے کہ جب کوئی شخص “بسم اللہ الرحمٰن رحیم” پڑھتا ہے تو جناح میں اس کے لئے پانچ ہزار روبی محل تعمیر کیے جاتے ہیں۔ ہر محل میں موتیوں سے بنے ایک ہزار خیمے ہوتے ہیں اور ہر ایک تختہ میں پتی کے ستر ہزار تخت ہیں اور ہر تخت میں خصوصی کپڑوں سے بنی ستر ہزار قالینیں ہیں اور ہر قالین پر ایک حور العین بیٹھا ہوا ہے۔ ایک شخص نے اس عظیم اجر کو حاصل کرنے کے لئے ضروری شرط طلب کی اور آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے جواب دیا کہ اس شخص کو یقین اور سمجھداری کے ساتھ “بسم اللہ الرحمٰن رحیم” پڑھنا چاہئے۔

جب ایک استاد کسی بچے کو “بسم اللہ الرحمٰن رحیم” پڑھنے کا درس دیتا ہے تو ، اس کے والدین اور اساتذہ سب کو جہنم کی آگ سے آزادی کی ضمانت ہے۔ روایت ہے کہ حضرت عیسیٰ علیہ السلام ایک دفعہ ایک قبرستان کے پاس سے گزر رہے تھے اور آپ نے ایک ایسی قبر دیکھی جس پر اللہ کا غضب اور سزا (سبحانہ و الصلا.) اتر رہی تھی ، چنانچہ وہ خاموشی سے ماضی کی طرف چل پڑا۔ جب وہ کچھ دیر بعد اسی جگہ سے گزرا تو اس نے دیکھا کہ رحمت اور برکت اللہ (سبحانہ و طلا ‘) اسی قبر پر برستی ہے۔ اس پر وہ حیرت زدہ ہوا اور اللہ (سبحانہ و طوعااللہ) سے پوچھا کہ کیا ہوا ہے اور اس کے سامنے یہ انکشاف ہوا کہ قبر کے اندر والا شخص ایک گنہگار ہے اور اس طرح اسے اپنے گناہوں کی سزا دی جارہی ہے۔ جب وہ فوت ہوا ، اس کی بیوی حاملہ تھی اور جلد ہی بیٹے کو جنم دیا۔ جب لڑکا بڑا ہوا تو اس کی والدہ اسے ایک اساتذہ کے پاس لے گئیں جس نے اسے “بسم اللہ الرحمٰن رحیم” پڑھنا سکھایا اور مجھے لگا کہ یہ انصاف نہیں ہوگا کہ اس شخص کا بیٹا میرے نام سے پکاررہا ہے اور میں اس کے والد کو سزا دے رہا ہوں۔

یہ بھی ذکر کیا گیا ہے کہ بلند آواز سے “بسم اللہ الرحمٰن رحیم” کی تلاوت ایک سچے مومن کی نشانیوں سے ہے۔

اللہ ہم سب کو ان لوگوں میں شامل فرمائے جو واقعی اس سے محبت کرتے ہیں۔ وہ ہمیں ان دونوں الفاظ اور اعمال میں اخلاص عطا فرمائے انشاء اللہ آمین۔

Muhammad Saqib

(کُلُّ نَفْسٍ ذَائقة الْمَوْتِ)

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
error: Content is protected !!