اسلامک

علامہ خادم حسین رضوی کی چہلم میں ڈاکٹر عبدالقدیر کی فون کال لازمی پڑھیں

بسم اللہ الرحمن الرحیم
السلام علیکم
ڈاکٹر عبدالقدیر

مجھے بہت خوشی ہے کہ میں آپ سے مخاطب ہوں
جیسا کہ آپ سب کو معلوم ہے کہ علامہ خادم حسین رضوی رحمۃ اللہ تعالی علیہ نے کئی دفعہ تقریروں میں ذکر کیا وہ مجھ سے بے حد محبت کرتے تھے اور میں بھی ان سے بے حد محبت کرتا تھا اور ہم دونوں کا ایک ہی مقصد تھا عشق رسول اور اس کے رسول کی حفاظت
اور اسی مقصد میں انہوں نے اپنی جان قربان کی جس طرح ان کا جنازہ ہوا جنازہ نے پوری دنیا کو ہلا کے رکھ دیا کہ پاکستان میں اتنے عشق رسول موجود ہیں یہ دنیا کو بتا دیا کہ اتنے بڑے میدان میں بھی نماز جنازہ پڑھنے کے لیے جگہ نہیں تھی میری آپ سب سے یہی گزارش ہے کہ آپ ان کے مشن کو جاری رکھیں اس وقت ملک کا بہت برا حال ہے قادیانیوں نے ہر جگہ گھیر کر لی ہے اور ہر جگہ کسی نہ کسی طرح گھسنے کی کوشش کر رہے ہیں
اور اس ملک کا بیڑہ غرق کرنے پر تلے ہوئے ہیں اور لوگ باہر سے لا لا کر لگائے جا رہے ہیں اور کوشش کیجیے کہ ان سب پر نظر رکھیے اور ان کی یہ بھی جنت ہوگی ہے کہ قرآن پاک میں تبدیلی کرکے مفت بانٹ رہے ہیں گھروں میں اور ہمیں تو تعجب یہ ہوتا ہے اگر کوئی اس طرح کی حرکت کرتا ہے تو اسے واجبالقتل کرکے اس کی لاش سڑک پر پھینک دیتے جو قرآن پاک میں تبدیلی کرتا اور ناموس رسالت کی بے حرمتی کرتا
ملک میں ایسا ماحول پیدا ہو گیا ہے کہ جب سرپرستی ہو رہی ہو جو نیچے والے ہیں وہ بھی بہت پر چڑھ کے آ رہے ہیں اور آہستہ آہستہ ملک کے اندر یہ لعنت پھیلتی جا رہی ہے
جب کہ اللہ پاک نے قرآن پاک میں بار بار فرمایا ہے کہ ہمارے پیارے رسول حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم خاتم النبییین اور آخری رسول ہیں نا ان کے بعد کوئی پیغمبر آئے گا نا کتاب آئے گی اس کے باوجود بھی اللہ تعالی نے لوگوں کو بتایا ہوا ہے لیکن یہ عمل نہیں کرتے اللہ تعالی زور ان کی پکڑ کرے گا اللہ تعالی نے وعدہ فرمایا ہے اور اپنے وعدے کی خلاف ورزی نہیں کرتا جن لوگوں نے بھی قرآن پاک اور نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے آخری نبی ہونے پر کوئی شک و شبہ کیا وہ دنیا میں بھی ذلیل ہوں گے اور آخر میں ذلیل ٹھیک ہوں گے بہت برا حال ہے اس وقت آپ لوگوں کو ہوشیار ہونے کی ضرورت ہے آپ نظر رکھیے یہ چیز پھیلنا شروع نہ ہو جائے
اور آپ کو معلوم ہے کہ جب لعنتی مسلمہ کذاب نے نبوت کا دعویٰ کیا تھا ان کے ساتھ ستر ہزار لوگ جمع ہوگئے تھے جیسے کہ شیطان لوگوں کو بہکاتاہے اور لوگوں کو بہت جلدغلط کاموں کی طرف لے کے جاتا ہے اور حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ نے فرمایا تھا کہ جاؤ جنگ پر جاؤ کوئی مرد مدینہ میں نہ رہے چاہے ابوبکر کو جانور آ کر چیر پھاڑ دیں .
اور پھر دیکھیں اللہ تعالی نے کتنی کامیابی دی پھر دیکھیں کہ اس جنگ میں بارہ سو صحابہ کرام رضی اللہ تعالی عنہ شہید ہوئے تھے آج تک کسی جنگ میں یہودیوں کی عیسائیوں کی کسی جنگ میں اتنے ہمارے صحابہؓ شہید نہیں ہوئے اس فتنےکو حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ نے اسی وقت کاٹ کے رکھ دیا تھا
ہم یہ تحریک جو میرے پیارے بھائی حضرت علامہ خادم حسین رضوی شروع کر گئے ہیں اس کو بڑھاؤ اور فرمایا کہ بے شک کچھ فرقوں کا آپس میں ناراضگی جھگڑا ہے لیکن ناموس رسالت صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے معاملے میں سب ایک ہو جائیں یہ سب کا ایک مسئلہ ہے
جزاک اللہ

Shafique Ahmad

ہم آپ کو بہترین انفارمیشن provide کریں گے تھنکس

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button