افسانے

  • گڑیا

    گڑیا

    گڑیا یہ ان دنوں کی بات ہے جب تیس سال کی سروس کے بعد میں اپنے آبائی گھر لوٹ آیا تھا ۔ لاہور صرف میری جائے پیدںئش ہی نہیں میرا دل میری جان بھی ہے۔ میرا گھر لارنس گارڈن سے دس منٹ کی پیدل مسافت پر ہے۔ انگریزوں کے زمانے کے اس پارک کی شان پاکستان میں پائے جانے والے تمام پارکوں سے زیادہ ہے اور میرے دل میں اسکی محبت بھی کچھ زیادہ ہے. میرا معمول ہے کہ میں روزانہ صبح فجر پڑھ کر میں مسجد سے ہی پارک کی طرف نکل جاتا ہوں ۔ پارک کے اندر ترت…

    Read More
  • انتقام (حصہ چہارم)

    انتقام (حصہ چہارم)

    ساس اور نند کے دبائو میں آکر زوہا اپنی چچی سے بات کرنے پر مجبور ہو گئی جب عباد کو بات کو پتہ چلا کہ فاخرہ اس سے شادی کرنا چاہتی ہے تو عباد نے صاف منع کر دیا لیکن عباد کے والدین نے رضا مندی دے دی کیونکہ وہ بھی دل سے چاہتے تھے کہ عباد بھی اب آگے بڑھ جائے کیوں کہ زوہا تو اپنی زندگی میں آگے بڑھ چکی تھی اور زوہا بھی یہی چاہتی تھی عباد شادی کر لے کیونکہ زوہا نہیں چاہتی تھی کہ اس کی وجہ سےعباد کی زندگی برباد ہو اور وہ وہیں…

    Read More
  • سوہنی دھرتی قسط نمبر 1

    روہان تمہاری آمی کو فون آیا ہاں آرہا ہوں- امی جی اگر میں سرحد پر بھی ہوا تو یقیناً آپ نے وہاں بھی فون گھما لینا ہے- اچھا جی جب خود باپ بنو گے تو پوچھوں گی – ارے آمی جی باپ تو تب بنوں گا نہ جب آپ میرے بارے میں کچھ سوچیں گی- اپنی بھتیجی کے ہاتھ پیلے کریں تو کچھ بنے گا نا- بڑے بے شرم ہو ماں سے کوئی ایسی بات کرتا ہے -تو اور کیا؟ سال بھر ہوگیا ہمارے نکاح کو اور آپ ہیں بس ! میرا تو بس چلتا تو سال پہلے ہی رخصت…

    Read More
  • غار والوں کی کہانی

    ہزاروں سال پہلے کا ذکر ہے کہ روم میں دقیانوس نامی بادشاہ حکومت کیا کرتا تھا وہ بہت ہی ظالم اور درندہ صفت انسان تھا- الله پر یقین نہیں رکھتا تھا اور بتوں کی پوجا کرتا تھا، اس کی پوری قوم الله کی عبادت سے ناواقف تھی بلکہ سب کے سب بتوں کی پوجا کرتے تھے- اسی بت پرست قوم میں کچھ سجھدار لوگ بھی رہتے تھے- وہ آپس میں اکثر یہ تذکرہ کرتے تھے کہ یہ مٹی کے بت ہیں جنہیں قوم والے خدا سمجھتے ہیں- یہ پھتر کی مورتیاں تو اپنے ناک پر بیٹھی ہوئی مکھی بھی نہیں…

    Read More
  • کتابِ عورت ایک داستانِ حیاتِ ابدی ہے … کائنات کو خلق کرنے سے پہلے خالق اکبر و مطلق نے ضرور سوچا ہو گا اگر دنیا بنانی ہے اور مرد خلق کرنا ہے تو پہلی ضرورت کیا ہے اُس وقت خالق نے عورت کا نام تجویز کیا ہو گا … !بے شک خالق نے اول آدم نام کا ایک شخص خلق کیا اور وہ ہدایت یافتہ تھا مگر ہدایت کے لئے اُس کے سامنے کوئی نہ تھا ‘ پھر خالق نے اُس میں سے اُس کے لئے ایک مخلوق پیدا کی جس کا عنوان عورت اور نام حوّا رکھا … مگر…

    Read More
  • انتقام (حصہ سوئم)

    شاہ میر وہاں سے واپس تو آ گیا تھا لیکن ابھی بھی اس کا دل و دماغ کو وہی اٹکا ہوا تھا اسے ایسا لگ رہا تھا جیسے کچھ غلط ہو گیا ہے بہت غلط لیکن اسے سمجھ نہیں آ رہی تھی بہر حال وہ واپس لندن آگیا جہاں پر اس کی ماں اس کا انتظار کر رہی تھی نازیہ بیگم شاہ میر کو دیکھ کر خوشی سے نہال ہوگئی ٭٭٭٭٭ ادھر فاخرہ بیگم نے مائرہ پر ظلم کے پہاڑ توڑ دیے آئے وہ مائرہ کے ساتھ جانوروں جیسا سلوک کرتی اور سارا کام نوکروں کی طرح کرواتی ہے اور…

    Read More
  • جیل میں بھائی کی ملاقات اور بیٹے کا سکول بیگ

    گزشتہ روز سینٹرل جیل میانوالی کے سامنے ایک ایک نوجوان نے لفٹ لینے کے لئیے ھاتھ آگے کیا میں نے موٹر سائیکل روک کے اسے ساتھ بٹھا لیااور دل میں سوچا کہ اسے اڈے پہ چھوڑ آؤں گا لیکن۔آگے جاکے اسکی کھانی سن کے میری آنکھوں سے بھی آنسو نکل آۓ وہ میانوالی بھکر کی باؤنڈری کے ایک گاؤں سے اپنے بھائ کی ملاقات کے لئیے میانوالی جیل میں آیا تھا اسکا بھائی قتل کے کیس میں جیل میں بند ھے یہ نوجوان ایک دیھاڑی دار مزدور تھا اسنے ادھار اور مزدوری کرکے پانچ ھزار روپے اکٹھے جوڑے ان پیسوں…

    Read More
  • بے انتہا آخری قسط

    سونیا بیٹا آگئی تم کہاں گئی تھی کچھ نہیں پاپا وہ میں عادل سے ملنے گئی تھی اچھا وہ آج بتارہا تھا اپنے گھر والوں کے بارے میں اچھا تو کیسے ہیں کیا بتارہا تھا پاپا وہ کہہ رہا تھا کہ اس کے گھر والے بہت سخت مزاج ہیں وہ پسند کی شادی کو پسند نہیں کرتے مجھے بہت ڈر لگ رہا ہے اگر اسے یہ سب معلوم تھا تو اس نے تمہارے ساتھ رشتہ کیوں بنایا پاپا پلیز سوچیں آپ کو معلوم ہے کہ میں اس سے بہت محبت کرتی ہوں اس کے بنا رہ نہیں سکتی وہ کہہ…

    Read More
  • چوہدری نے کہا اے بڈھے تم رات کو اپنی بیٹی کو میرے گھر لے آنا کیونکہ میں اس کے ساتھ۔۔۔

    پرانے وقتوں کی بات ہے کہ پہاڑوں کے درمیان ایک چھوٹا سا گاؤں آباد تھا اس گاؤں میں ہر طرف سبزہ ہی سبزہ تھا۔ اس گاؤں میں بہت زرخیز زمینیں تھیں جن میں کسان اپنی فصل اگا کر اپنا روزگار حاصل کرتے تھے اور اسی گاؤں میں ایک چوہدری رہتا تھا وہ چوہدری بہت امیر انسان تھا۔ اس گاؤں کی زمینوں میں سے آدھی زمین اس چوہدری کی تھی اور باقی اس گاؤں کے تمام کسانوں کی تھی۔ چوہدری کے پاس تمام سہولیات میسر ہونے کی وجہ سے اس کی فصل سارے کسانوں سے اچھی ہوتی تھی اور وہ چوہدری…

    Read More
  • لڑکی جو مرنے کے بعد بھی زندہ رہی

    صبح کی ہلکی روشنی میں چہکتے پرندوں کی طرح توانائی سے بھرپور ہر دم ہر جگہ بس وہ موجود ہوتی۔ اس طرح گھر اور سکول میں بھی اس قدر وہ انمول تھی کہ اسی کے انتظار میں ہوتے سب ہر جگہ یعنی کہ اگر اس نے سکول سے چھٹی کرلی اس کے بغیر اساتذہ اس کی کلاس میں دلچسپی نہ لیتے اور اس کے دوسرے ہم جماعت بھی اداس ہوتے ان کے کھیل ادھور ےرہ جاتے ان کے بہت سارے منصوبے بس منصوبے بن کر رہ جاتے اور اسی طرح اس کے گھر میں اور رشتے داروں میں جہاں جہاں…

    Read More
Back to top button
info@newzflex.com-اگر آپ اپنے پسندیدہ موضوع کو ویڈیو کی صورت میں دیکھنا چاہتے ہیں تو ہمیں اپنی پسند سے آگاہ کرنے کیلیے اس ایڈریس پر ای میل کیجیےLike & Subscribe the Newz_Flex Channel
error: Content is protected !!